Abdul Hakim, 58180, Punjab, PK

Nukta Cheen Hai Gham-e-Dil Us Ko Sunaye Na Bane – Mirza Ghalib

Har Taan Hai Deepuck!

Nukta Cheen Hai Gham-e-Dil Us Ko Sunaye Na Bane – Mirza Ghalib


نکتہ چیں ہے غمِ دل اُس کو سنائے نہ بنے – مرزا اسد اللہ خاں غالبؔ
مرزا غالبؔ کی اردو غزل کی بلند خوانی۔
آواز: راحیلؔ فاروق
پیشکش: دیپک میڈیا

دیپک میڈیا اردو شاعری اور بالخصوص اردو غزلیات کو آڈیو (صوتی) شکل میں پیش کر کے اردو ادب کی خدمت کر رہا ہے۔ تقریباٰ تمام اہم سماجی واسطوں پر بالکل مفت دستیاب آڈیو شاعری کے ان شہکاروں کی نسبت آپ کی آرا اور تبصروں کو خوش آمدید کہا جائے گا۔

Nukta Cheen Hai Gham-e-Dil Us Ko Sunaye Na Bane (Audio)
Mirza Asad Ullah Khan Ghalib
Urdu Ghazal of Mirza Asadullah Khan Ghalib
Oral Interpretation: Raheel Farooq
Production: Deepuck Media

Deepuck Media produces Urdu poetry audios with a vision to promote the legendary tradition of Urdu literature. Classic recordings, full audios, absolutely free!

غزل:

نکتہ چیں ہے، غمِ دل اُس کو سنائے نہ بنے
کیا بنے بات جہاں بات بنائے نہ بنے

میں بُلاتا تو ہوں اُس کو مگر اے جذبۂِ دل
اُس پہ بن جائے کُچھ ایسی کہ بِن آئے نہ بنے

کھیل سمجھا ہے کہیں چھوڑ نہ دے بھول نہ جاے
کاش یوں بھی ہو کہ بن میرے ستائے نہ بنے

غیر پھرتا ہے لیے یوں ترے خط کو کہ اگر
کوئی پوچھے کہ یہ کیا ہے تو چھپائے نہ بنے

اِس نزاکت کا برا ہو وہ بھلے ہیں تو کیا
ہاتھ آویں تو اُنھیں ہاتھ لگائے نہ بنے

کہہ سکے کون کہ یہ جلوہ گری کس کی ہے
پردہ چھوڑا ہے وہ اُس نے کہ اُٹھائے نہ بنے

موت کی راہ نہ دیکھوں کہ بن آئے نہ رہے
تم کو چاہوں کہ نہ آؤ تو بلائے نہ بنے

بوجھ وہ سر سے گرا ہے کہ اٹھائے نہ اُٹھے
کام وہ آن پڑا ہے کہ بنائے نہ بنے

عشق پر زور نہیں ہے یہ وہ آتش غالبؔ
کہ لگائے نہ لگے اور بجھائے نہ بنے

 

%d bloggers like this: