Abdul Hakim, 58180, Punjab, PK

Aayeena Kyun Na Dun Ke Tamasha Kahen Jise – Mirza Ghalib

Har Taan Hai Deepuck!

Aayeena Kyun Na Dun Ke Tamasha Kahen Jise – Mirza Ghalib

آئینہ کیوں نہ دوں کہ تماشا کہیں جسے – مرزا اسد اللہ خاں غالبؔ
مرزا غالبؔ کی اردو غزل کی بلند خوانی۔
آواز: راحیلؔ فاروق
پیشکش: دیپک میڈیا

دیپک میڈیا اردو شاعری اور بالخصوص اردو غزلیات کو آڈیو (صوتی) شکل میں پیش کر کے اردو ادب کی خدمت کر رہا ہے۔ تقریباٰ تمام اہم سماجی واسطوں پر بالکل مفت دستیاب آڈیو شاعری کے ان شہکاروں کی نسبت آپ کی آرا اور تبصروں کو خوش آمدید کہا جائے گا۔

Aayeena Kyun Na Dun Ke Tamasha Kahen Jise (Audio)
Mirza Asad Ullah Khan Ghalib
Urdu Ghazal of Mirza Asadullah Khan Ghalib
Oral Interpretation: Raheel Farooq
Production: Deepuck Media

Deepuck Media produces Urdu poetry audios with a vision to promote the legendary tradition of Urdu literature. Classic recordings, full audios, absolutely free!

غزل:

آئینہ کیوں نہ دوں کہ تماشا کہیں جسے
ایسا کہاں سے لاؤں کہ تجھ سا کہیں جسے

حسرت نے لا رکھا تری بزمِ خیال میں
گلدستۂِ نگاہ سویدا کہیں جسے

پھونکا ہے کس نے گوشِ محبت میں اے خدا
افسونِ انتظار تمنا کہیں جسے

سر پر ہجومِ دردِ غریبی سے ڈالیے
وہ ایک مشتِ خاک کہ صحرا کہیں جسے

ہے چشمِ تر میں حسرتِ دیدار سے نہاں
شوقِ عناں گسیختہ دریا کہیں جسے

درکار ہے شگفتنِ گلہائے عیش کو
صبحِ بہار پنبۂ مینا کہیں جسے

غالبؔ برا نہ مان جو واعظ برا کہے
ایسا بھی کوئی ہے کہ سب اچھا کہیں جسے

 

%d bloggers like this: